چین نے سال نو کی تعطیلات کے دوران کوویڈ۔19 الرٹ کو بڑھا دیا

چین کے دارالحکومت بیجنگ کے ضلع ہائی دیان میں نوول کرونا وائرس کی ٹیسٹنگ سائٹ پر ایک کمیونٹی اہلکار نیوکلیک ایسڈ ٹیسٹ کے منتظر رہائشیوں کی معلومات کا اندراج کر رہا ہے۔(شِنہوا)

بیجنگ(شِنہوا)چین نے آمدہ موسم بہار میلہ کے دوران ملک میں مزید بین علاقائی دوروں کے پیش نظر اپنے کمیونٹی طبی اداروں سے کہا ہے کہ وہ نوول کرونا وائرس کیسز کی جلد شناخت کرنے کی اپنی صلاحیت کو بہتر بنائیں۔

نوول کرونا وائرس کے خلاف جنگ کی حالیہ سنگین اور پیچیدہ صورتحال پر انتباہ جاری کرتے ہوئے قومی صحت کمیشن نے ایک سرکلر میں کہا کہ تہوار کے سفری رش کی وجہ سے ملک کو وبائی ردعمل میں شدید دباؤ کا سامنا ہے۔

مقامی حکام پر زور دیا جاتا ہے کہ وہ شہری اور دیہی علاقوں میں بنیادی مراکز صحت کی رہنمائی کریں تاکہ بخار کے کلینکس کے انتظام کو مضبوط کیا جا سکے، مشتبہ کیسز کی جلد از جلد اطلاع دی جائے اور ہسپتالوں کے اندر کیسز کی منتقلی کو روکنے کیلئے بھی اقدامات اٹھائے جائیں۔

چینی سال نو یا بہار میلہ رواں سال یکم فروری کو شروع ہو گا۔ سرکاری اعدادوشمار کے مطابق رواں سال بہار میلے کا سفری رش 17 جنوری سے شروع ہو کر 25 فروری تک جاری رہے گا جس کے دوران مسافروں کی آمدورفت کی تعداد گزشتہ سال کی نسبت 35.6 فیصد اضافہ کے ساتھ 1 ارب 18 کروڑ تک پہنچنے کی توقع ہے۔