انڈونیشیا میں 6.1 شدت کا زلزلہ ، جانی نقصان کی اطلاع موصول نہیں ہوئی

جکارتہ(شِنہوا)انڈونیشیا کے صوبے شمالی سولاویسی میں 6.1 شدت زلزلے کے جھٹکے محسوس کیے گئے ہیں جس کے باعث ابتدائی طور پر کسی قسم کے املاک و جانی نقصان کی کوئی اطلاع موصول نہیں ہوئی ہے۔

موسمیات، ماحولیات  اور ارضی طبیعیات ایجنسی نے ہفتے کے روز بتایا کہ زلزلے کے باعث ممکنہ طور پر سونامی کی بڑی لہریں پیدا نہیں ہوئی ہیں۔

ایجنسی نے بتایا کہ زلزلہ جکارتہ کے وقت کے مطابق صبح 9 بجکر 26 منٹ(7 بجکر 26 منٹ پاکستانی وقت) پر آیا جس کا مرکز ضلع تولاد کے قصبے میلونگوانے سے 39 کلومیٹر جنوب مشرق میں سمندر کی تہہ سے 12 کلومیٹر کی گہرائی میں تھا۔

قصبے میں زلزلے کی شدت ایم ایم آئی(ترمیم شدہ زلزلہ پیما) پر 3 اور 4 ریکارڈ کی گئی ہے۔

ضلع تولاد میں ڈیزاسٹر مینجمنٹ اینڈ مٹیگیشن ایجنسی کے سربراہ جبیس لنڈا نے فون پر شِنہوا کو بتایا کہ ضلع میں زلزلے کے شدید جھٹکے محسوس کیے گئے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ زلزلے کے جھٹکوں کی شدت زیادہ تھی لیکن اس سے شہریوں میں خوف و ہراس پیدا نہیں ہوا۔ اب تک ہمیں مکان تباہ ہونے اور کسی کے زخمی یا ہلاک ہونے کی کوئی اطلاع موصول نہیں ہوئی ہے۔