چین میں تمباکو ریگولیٹر کے سابق انضباطی انسپکٹر پر رشوت خوری کے الزام میں فرد جرم عائد

بیجنگ(شِنہوا)چین میں تمباکو اجارہ داری کی ریاستی انتظامیہ کے سابق سینئر انضباطی انسپکٹر پھان جیا ہوا پر رشوت لینے کے الزام میں فرد جرم عائد کر دی گئی ہے۔

سپریم پیپلز پروکیوریٹوریٹ (ایس پی پی ) نے جمعرات کے روز بتایا کہ پھان جیا ہوا کمیونسٹ پارٹی آف چائنہ کے مرکزی معائنہ کمیشن برائے نظم و ضبط  کی طرف سے تمباکو اجارہ داری کی ریاستی انتظامیہ کو بھیجی گئی انضباطی معائنہ ٹیم کے سربراہ اور انتظامیہ کے سرکردہ پارٹی اراکین کے گروہ کے رکن رہ چکے ہیں۔پھان جیاہوا کا مقدمہ صوبہ انہوئی کے  ہیفے  پیپلز پروکیوریٹوریٹکی جانب سے شہر کی انٹرمیڈیٹ پیپلز کورٹ میں دائر کیا گیا ہے۔

استغاثہ نے پھان جیاہوا پر الزام لگایا کہ اس نے اپنے مختلف عہدوں کا فائدہ اٹھا کر دوسروں کیلئے فوائد حاصل کیے اور بدلے میں بھاری رقوم اور تحائف قبول کیے۔

ایس پی پی نے بتایا کہ استغاثہ نے مدعا علیہ کو اس کے قانونی چارہ جوئی کے حقوق سے آگاہ کیا، اس سے پوچھ گچھ کی اور وکیل دفاع کے دلائل سنے۔