چین ، 56 فیصد افراد کو پہلی سہ ماہی میں مکانات کی قیمتیں برقرار ر ہنے کی امید

بیجنگ (شِنہوا) چین کے مرکزی بینک کی جانب سے کئے گئے ایک حالیہ سروے میں کہا گیا ہے کہ "چین میں رہائشیوں کی اکثریت سمجھتی ہے کہ سال 2022 کی پہلی سہ ماہی میں مکانات کی قیمتیں یا تو برقرار رہیں گی یا پھر ان میں کمی ہوگی۔

پیپلزبینک آف چائنہ کے سروے کے مطابق ” چین بھرکے 50 شہروں میں 20 ہزار شہری بینک جمع کنند گان میں 56.7 فیصد سمجھتے ہیں کہ پہلی سہ ماہی میں مکانات کی قیمتوں میں کوئی تبدیلی نہیں ہوگی جبکہ 15.2 فیصد  نے اس میں کمی کی پیشن گوئی کی ہے۔

16.8 فیصد رائے دہندگان کو مکانات کی قیمتوں میں اضافے کی امید ہے۔

"مکان رہنے کے لئے ، قیاس آرائی کے لئے نہیں” کے اصول پر رہتے ہوئے چین نے گزشتہ چند برسوں میں مکانات کی قیمتوں میں کمی اور جائیداد کے شعبے میں صحت مند ترقی کے فروغ کے لئے متعدد اقدامات کئے ہیں۔

گزشتہ ماہ ہونے والی سالانہ مرکزی اکنامک ورک کانفرنس کے مطابق چین مکانات کے خریداروں کی مناسب مانگ کو بہتر طریقے سے پورا کرنے کے لیے جائیدادوں کے شعبے کی حمایت کرے گا اور اس کی صحت مند ترقی کو فروغ دینے کے لئے مخصوص شہری پالیسیاں اپنائے گا۔