سیرم انسٹیٹیوٹ آف انڈیا ستمبر میں نئی کوویڈ۔19 ویکسین لانچ کرنے کیلئے پراُمید

بھارت کے گوہاٹی کے ایک اسٹیڈیم میں لوگ نوول کروناوائرس کی ویکسین لگوانے کیلئے قطار بنائے ہوئے ہیں۔(شِنہوا)

نئی دہلی(شِنہوا)بھارت کی ویکسین بنانے والی کمپنی سیرم انسٹیٹیوٹ آف انڈیا(ایس آئی آئی) ستمبر میں ملک میں اپنی دوسری نوول کرونا وائرس ویکسین "کووویکس ” لانچ کرنے کیلئے پر اُمید ہے۔

کاروباری خبروں کے ایک مقامی ٹی وی چینل "سی این بی سی ۔ ٹی وی 18 ” نے بدھ کے روز رپورٹ کیا کہ نئی ویکسین امریکہ کی ویکسین بنانے والی کمپنی نوواویکس کے ساتھ اشتراک سے تیار کی جا رہی ہے ، مزید کہا گیا کہ یہ معلومات ایس آئی آئی کے چیف ایگزیکٹو آفیسر ادار پوناوالا کی جانب سے ایک انٹرویو کے دوران فراہم کی گئی ہیں۔

چینل نے کہا کہ ایس آئی آئی کے ادار پوناوالا نے ہمیں بتایا ہے کہ اگر ریگولیٹری منظوری مل گئی تو کووویکس ویکسین ستمبر تک بھارت میں لانچ کرنے کیلئے تیار ہوجائیگی۔ امریکہ اور میکسیکو سے نوواویکس کے کلینیکل ٹرائلز کے تیسرے مرحلے میں حاصل ہونیوالے اعداد شمار میں علامات کے ساتھ نوول کرونا وائرس کی روک تھام کیلئے اس کی افادیت 90.4 فیصد رہی ہے۔

اس وقت ویکسین کے ٹرائلز تکمیل کے انتہائی اگلے مرحلے میں ہیں۔

دوا ساز کمپنی جولائی میں بچوں کیلئے کوویکس کے کلینیکل ٹرائلز شروع کرنے کا بھی منصوبہ بنا رہی ہے۔