اسرائیل کا میزائل حملے کے بعد شام میں اہداف پر حملہ

یروشلم (شِنہوا) اسرائیل کی فوج نے جمعرات کے روز کہا ہے کہ اس نے شام میں اس وقت اہداف پرحملہ کیا جب شام کے ایک طیارہ شکن میزائل کی جانب سے اسی روز کے اوائل میں جنوبی اسرائیل کو نشانہ بنایا گیا تھا۔

اسرائیل میں فوری طور پر کسی کے زخمی ہونے یا نقصان پہنچنے کی کوئی اطلاع موصول نہیں ہوئی ہے۔

اسرائیلی فوج کے ترجمان نے ایک بیان میں کہا ہے کہ زمین سے فضا تک مار کرنے والے میزائل داغے جانے کی نشاندہی شام سے ہوئی ہے ، یہ میزائل صحرائے نگو میں گرا۔

فوج کے مطابق میزائل نے جنوبی شہر دیمونا میں سائرن کو متحرک کیا ، جہاں اسرائیل کا نگو جوہری تحقیقاتی مرکزواقع ہے۔

فوج نے بتایا کہ اس کے فوراً بعد ہی ایک حملے میں اسرائیلی فوج نے اس بیٹری کواور اس علاقے میں زمین سے فضا میں مار کرنے والی اضافی بیٹریوں کو نشانہ بنایا جس سے یہ میزائل داغا گیا تھا اور جو اس میزائل کا جواب تھا ۔

اسرائیلی فوج کے ترجمان ھادی زلبرمین نے ایک الگ بیان میں کہا ہے کہ شامی میزائل ، جس کا مقصد شام کے گولان میں اسرائیلی فضائیہ کے جیٹ طیاروں کو نشانہ بنانا تھا  اپنے ہدف کو نشانہ بنانے میں ناکام رہا۔