جمرات میں شیطان کر کنکریاں مارنے اور قربانی کرنے کے بعد حجاج کرام احرام کی حالت سے باہر

مکہ مکرمہ (آئی این پی)جمرات میں شیطان کر کنکریاں مارنے اور قربانی کرنے کے بعد حجاج کرام احرام کی حالت سے باہر آگئے ،بیت اللہ شریف کا طواف زیارت، آئندہ تین دن منیٰ میں قیام اور شیطان کو کنکریاں کے بعد مناسک حج کا عمل مکمل ہو جائے گا،سعودی عرب اور خلیجی ممالک میںبھی ہفتہ کو عید الاضحی مذہبی عقیدت و احترام کیساتھ منائی گئی ،مسجدالحرام اور مسجد نبوی ۖ میں نماز عید کے موقع پر روح پرور مناظر دیکھے گئے ۔ اس موقع پر امت مسلمہ کی سر بلندی اور پاکستان کی سلامتی اور خوشحالی کیلئے خصوصی دعائیں کی گئیں۔

تفصیلات کے مطابق جمرات میں شیطان کر کنکریاں مارنے اور قربانی کرنے کے بعد حجاج کرام احرام کی حالت سے باہر آگئے۔ بیت اللہ شریف کا طواف زیارت، آئندہ تین دن منیٰ میں قیام اور شیطان کو کنکریاں کے بعد مناسک حج کا عمل مکمل ہو جائے گا۔ میدان عرفات کی مسجد نمرہ سے حج کا خطبہ سننے اور رکن اعظم وقوف عرفہ کے بعد 84ہزار پاکستانیوں سمیت دنیا بھر سے دس لاکھ حجاج کرام نے مزدلفہ پہنچ کر رات کھلے آسمان تلے گزاری ۔ مزدلفہ میں نماز فجر کی ادائیگی اور طلوع آفتاب کے بعد واپس منی میں اپنے خیموں میں پہنچے جہاں پہلے روز انہوں نے بڑے شیطان کنکریاں مارنے اور قربانی کے بعد بال منڈوائے اور احرام سے باہر آگئے۔ حجاج مزید تین دن تک منی ٰمیں قیام کرینگے اس دوران بیت اللہ کا طواف زیارت کرنے اور شیطانوں کو کنکریاں مارنے کے بعد مناسک حج مکمل ہو جائیں گے۔

سعودی عرب اور خلیجی ممالک میںبھی ہفتہ کو عید الاضحی مذہبی عقیدت و احترام کیساتھ منائی گئی ۔ مسجدالحرام اور مسجد نبوی ۖ میں نماز عید کے موقع پر روح پرور مناظر دیکھے گئے ۔ اس موقع پر امت مسلمہ کی سر بلندی اور پاکستان کی سلامتی اور خوشحالی کیلئے خصوصی دعائیں کی گئیں۔