نیپال نے 5 جی کے ٹرائلز کے لیے پہلا لائسنس جاری کردیا

کھٹمنڈو(شِنہوا) نیپال نے 5 جی کے دور میں داخلے کی جانب ایک قدم بڑھاتے ہوئے ملک کے معروف ٹیلی کام آپریٹر کو 5جی نیٹ ورک کے ٹرائلز کا لائسنس دیا ہے۔

نیپال ٹیلی کمیونیکیشن اتھارٹی (این ٹی اے) کے ترجمان، سنتوش پاڈیل نے جمعرات کو شِنہوا کو بتایا کہ ریگولیٹر نے نیپال ٹیلی کام کو اس ہفتے کے اوائل میں 5 جی  کے ٹرائلز کی اجازت دی ہے۔

انہوں نے بتایا کہ کمپنی کو ایک سال کے اندر 60 میگا ہرٹز فریکوئنسی بینڈوڈتھ کے ساتھ 2ہزار 600 میگا ہرٹز بینڈ پر ٹرائلز کا لائسنس دیا گیا ہے، اور یہ کہ  پہلی بار کہ کسی ٹیلی کام آپریٹر کو اس جنوبی ایشیائی ملک میں 5 جی ٹرائلز کی اجازت دی گئی ہے۔

این ٹی اے نے بتایا کہ نجی ٹیلی کام کمپنی این سیل نے بھی 5 جی ٹرائلز شروع کرنے کی اجازت طلب کی ہے۔

نیپال ٹیلی کام نے بتایا کہ  ٹرائلز کے لیے فروخت کنندگان کمپنیوں سے 5 جی نیٹ ورک کا سامان لانے کی اجازت دی گئی ہے، تاہم  ابھی تک یہ فیصلہ نہیں کیا کہ ٹرائلز کب شروع کیے جائیں۔