چین کے سابق نائب وزیر ثقافت وسیاحت کو کمیونسٹ پارٹی آف چائنہ سے نکال دیا گیا،عہدے سے برطرف

بیجنگ (شِنہوا) چین کے سابق نائب وزیر ثقافت وسیاحت لی جن ژاؤ کو پارٹی نظم و ضبط اور قوانین کی سنگین خلاف ورزی پر کمیونسٹ پارٹی آف چائنہ(سی پی سی) سے نکالنے کے ساتھ  عوامی عہدے سے برخاست کردیا گیاہے۔

لی   کو 19 ویں سی پی سی نیشنل کانگریس کے مندوب کے  عہدے سے بھی ہٹا دیا گیاہے۔

کمیونسٹ پارٹی آف چائنہ مرکزی کمیشن برائے نظم و ضبط معائنہ اور قومی نگران کمیشن نے ایک بیان میں کہا ہے کہ  لی کے معاملے کی تحقیقات کی گئی ہیں۔

لی پر پارٹی سے بے ایمانی اور بے وفائی کرنے اور حکام کی تفتیش میں مزاحمت کرنے کا الزام عائد کیا گیا۔

بیان کے مطابق تحقیقات سے یہ بات سامنے آئی کہ  لی کمیونسٹ پارٹی آف چائنہ کے ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی کرتے ہوئے ضیافتوں میں اکثر شرکت کرتے رہے جس سے ان کے کام کی غیر جانبداری پر سمجھوتہ کرنے، رقم اور تحائف قبول کرنے کا خطرہ تھا۔

لی نے سرکاری بھرتیوں اور تقرری کے طریقہ کار میں رقم اور تحائف کے بدلے دوسروں لوگوں کی مدد کی۔