آسٹریلوی وزیراعظم کا امریکی پولیس کی جانب سے آسٹریلیا کے صحافیوں پر تشدد کی تحقیق کا مطالبہ

امریکی دارالحکومت واشنگٹن ڈی سی میں سیاہ فام شہری جارج فلائیڈ کی ہلاکت پر احتجاج کے دوران مظاہرین پولیس سے الجھ رہے ہیں۔(شِنہوا)

سڈنی(شِنہوا) آسٹریلیا کے وزیراعظم اسکاٹ موریسن نے واشنگٹن ڈی سی میں مظاہرے کے دوران ایک آسٹریلیائی صحافی اور ایک کیمرہ مین پر امریکی پولیس کے تشدد کے واقعہ کی تحقیق کا مطالبہ کیا ہے۔

یہ صحافتی عملہ وائٹ ہاؤس کے قریب ہونے والے ایک بڑے احتجاج کو براہ راست نشر کر رہا تھا۔ویڈیو فوٹیج کے مطابق پولیس اہلکاروں نے پہلے مرد کیمرہ مین کو ڈھال اور مکوں سے مارا اور پھر پیچھے ہٹنے والی خاتون صحافی کو لاٹھی سے مارا۔

مقامی میڈیا کے مطابق موریسن نے امریکی دارالحکومت میں آسٹریلوی سفارت خانے سے رابطہ کیا اور واقعے کی تحقیق کی ہدایت کی۔ یہ صحافی جو آسٹریلیا کے نشریاتی ادارے سیون نیوزکے ساتھ وابستہ ہیں نے کہا کہ پولیس نے اندھا دھند کارروائی کی حالانکہ انہوں نے میڈیا کے ارکان کے طور پر اپنی شناخت بھی کرائی۔