روڈ ورلڈ سائیکلنگ،پاکستانی مرد سائیکلسٹس ٹاپ50میں بھی جگہ نہ بنا سکے

2021 Giro d'Italia;

فلینڈرز(آئی این پی)روڈ ورلڈ سائیکلنگ چیمپئن شپ میں مردوں کی انفرادی ٹائم ٹرائلز میں پاکستانی سائیکلسٹس ٹاپ50میں بھی جگہ نہ بناسکے۔روڈ ورلڈ سائیکلنگ چیمپئن شپ بیلجیم کے شہر فلینڈرز میں شروع ہوگئی۔ چیمپئن شپ کے پہلے روز پاکستان کے 2سائیکلسٹس علی الیاس اور خلیل امجد مردوں کی انفرادی ٹائم ٹرائلز میں شریک ہوئے۔ 43.3کلومیٹر کی اس ریس میں پاکستان کے علی الیاس نے 52ویں جبکہ خلیل امجد نے 54ویں پوزیشن حاصل کی۔علی الیاس پہلی اسپلٹ کے اختتام پر 53ویں پوزیشن پر تھے تاہم بقیہ 2اسپلٹس میں انہوں نے اپنی پوزیشن کو بہتر کیا اور ریس 52ویں پوزیشن پر ختم کی۔ انہوں نے مقررہ فاصلہ 58منٹ، 53عشاریہ 66سیکنڈز میں طے کیا۔ یہ گولڈ میڈل حاصل کرنے والے اٹلی کے سائیکلسٹ سے 11منٹ 5سیکنڈز کم تھا جبکہ ان کی اوسط اسپیڈ 44.113 رہی۔پاکستان سائیکلنگ ٹیم کے منیجر شعیب نظامی کہتے ہیں کہ ماضی میں پاکستانی کھلاڑی اس فاصلے پر گولڈ میڈلسٹس سے 15 منٹ پیچھے ہوا کرتے تھے، اب 11منٹ پیچھے ہیں جو کارکردگی میں بہتری ہے۔ایونٹ میں شریک پاکستان کے دوسرے سائیکلسٹ خلیل امجد نے فاصلہ ایک گھنٹہ، ایک منٹ، 7عشاریہ 50سیکنڈز میں طے کیا۔42عشاریہ5کی اوسط اسپیڈ سے سائیکلنگ کرنے والے خلیل امجد گولڈ میڈلسٹس سائیکلسٹ سے 13منٹ 19سیکنڈز پیچھے رہے۔ایونٹ میں خواتین کی انفردای ٹائم ٹرائل ریس پیر کو ہوگی جس میں پاکستان کی2 خواتین سائیکلسٹس کنزہ ملک اور عاصمہ جان شریک ہوں گی۔پاکستان سائیکلینگ ٹیم کے مینجر شعیب نظامی کہتے ہیں کہ گوکہ پلیئرز ٹاپ 50 میں بھی نہیں آئے لیکن یہ پہلے سے بہتر نتیجہ ہے، بہتر رزلٹس کیلئے ضروری ہے کہ نوجوانوں پر کام کریں اور ساتھ ساتھ ملک میں سائیکلنگ کا انفرا اسٹکچر بہتر بنائیں۔