مودی سرکار کے اوچھے ہتھکنڈے ، کاشتکاروں کو پانی کی سپلائی بند

نئی دہلی(آئی این پی )بھارت میں زرعی قوانین کے خلاف احتجاج اگلے مرحلے میں داخل ہو گیا، مودی سرکار پر دبا بڑھانے کا منصوبہ تیارکر لیا گیا، کسانوں نے 15روزہ پلان کا اعلان کر دیا، کسان چار ریاستوں کے الیکشن میں مودی کے خلاف مہم چلائیں گے،بھارت میں کسانوں نے طویل منصوبہ بندی کر لی۔ بھارتی میڈے اکے مطاق متحدہ کسان مورچہ نے سنگھو بارڈر پر پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ قومی شاہراوں کو بلاک کیا جائیگا، کسان رہنما یوگندرا یادو نے کہا کہ چار ریاستوں کے الیکشن میں مودی کے خلاف مہم چلائی جائے گی،تحریک کے لیڈر متعدد ریاستوں کا دورہ بھی کریں گے،کسان رہنما بلبیر سنگھ نے کہا کہ حکومتی سیاسی لیڈر کاشتکاروں کے گناہگار ہیں، انہیں سبق سکھا دیں گے،مغربی بنگال، آسام، کیرالا، تامل ناڈو کے اسمبلی انتخابات دوماہ بعد شیڈول ہیں،دوسری جانب مودی سرکار کے اوچھے ہتھکنڈے بھی جاری ہیں، کاشتکاروں کو پانی کی سپلائی بند کرنا شروع کر دی۔