سپریم کورٹ نے خواجہ سعد رفیق کے حق میں فیصلہ دے کربڑا سرپرائز دے دیا،تحریک انصاف جھوٹی ثابت ہو گئی

لاہور (آئی این پی) سپریم کورٹ نے این اے 125 مبینہ دھاندلی کیس میں الیکشن ٹریبونل کا فیصلہ کالعدم قرار دے دیا‘ فیصلہ کے مطابق عام انتخابات 2013 میں این اے 125 میں دھاندلی نہیں ہوئی۔ جمعرات کو سپریم کورٹ لاہور رجسٹری نے این اے 125 مبینہ دھاندلی کیس کا فیصلہ سنایا۔ سپریم کورٹ کے دو رکنی بینچ نے خواجہ سعد رفیق کی اپیل منظور کرلی۔ سپریم کورٹ فیصلہ کے مطابق عام انتخابات 2013 میں این اے 125میں دھاندلی نہیں ہوئی۔ سپریم کورٹ نے الیکشن ٹریبونل کا فیصلہ کالعدم قرار دے دیا۔ سعد رفیق نے الیکشن ٹریبونل فیصلے کے خلاف سپریم کورٹ سے رجوع کیا تھا۔ ٹریبونل نے انتخابی نتائج کالعدم قرار دے کر ضمنی الیکشن کا حکم دیا تھا۔ این اے 125 سے خواجہ سعد رفیق نے حامد خان کو شکست دی تھی۔ حامد خان نے انتخابی نتائج الیکشن ٹریبونل میں چیلنج کئے تھے۔ (ن غ)