وزیر اعطم عمرا ن خان کا استعفی کے حوا لے سے حیرا ن کن اعلان

اسلام آباد(آئی این پی)وزیراعظم عمران خان نے اپوزیشن کی جانب سے استعفے کے مطالبے کو مسترد کرتے ہوئے کہاہے کہ وہ منتخب وزیراعظم ہیں،استعفیٰ نہیں دینگے ،ملک کی مشکلات ختم کر کے دکھائیں گے ،حکومت اس طرح چھوڑ کر نہیں جائیں گے، مولانا فضل الرحمان کے احتجاج کا کچھ مخصوص ایجنڈا ہے جس پر بھارت میں خوشیاں منائی جا رہی ہیں، اپوزیشن کا دھرنے کے پیچھے مخصوص ایجنڈا ہے یہ سب این آراوکیلئے سب کچھ کیاجارہاہے،حکومت کسی قسم کااین آراونہیں دے گی،کرپٹ عناصر کیخلاف کاروائی کی جائیگی، مولانا کی سمجھ نہیں آتی کبھی مذہبی کارڈ استعمال کرتے ہیں ، کبھی کچھ کہتے ہیں اور کبھی کچھ،مولانافضل الرحمان کامیڈیابلیک آئوٹ نہیں ہوناچاہیے، حکومت دو بڑے درپیش مسائل مہنگائی اور بے روزگاری کے خاتمے کے لئے کام کررہی ہے ، معیشت بہتری کی جانب گامزن ہے،کشمیر کی صورتحال ابھی بھئی کشیدہ ہے،بھارتی جارحیت کامنہ توڑ جواب دیاجائیگا،اسرائیل چاہتا ہے کہ سعودی عرب اور ایران میں جنگ ہو ،میری خواہش ہے کہ ایران اورسعودی وزرائے خارجہ کے درمیان ملاقات کرائوں ، ہم سنجیدہ ہو کر مذاکرا ت کریں گے۔بدھ کو وزیراعظم عمران خان نے سینئر صحافیوں اور تجزیہ کاروں سے ملاقات کی جو دو گھنٹے جاری رہی ۔انہوں نے کہا کہ مہنگائی اور بیروزگاری بہت بڑا مسئلہ ہے ،ہم اس کیلئے کام کر رہے ہیں ، معیشت بہتری کی جانب گامزن ہے ، روپے کی قدر مستحکم ہورہی ہے ۔انہوں نے کہا کہ مولانا فضل الرحمان کے احتجاج کا کچھ مخصوص ایجنڈا ہے جس پر بھارت میں خوشیاں منائی جا رہی ہیں ، منتخب وزیراعظم ہوں،استعفیٰ نہیں دوں گا،ملک کی مشکلات ختم کر کے دکھائیں گے ،حکومت اس طرح چھوڑ کر نہیں جائیں گے ۔انہوں نے کہا کہ اپوزیشن کا دھرنے کے پیچھے مخصوص ایجنڈا ہے یہ سب این آراوکیلئے سب کچھ کیاجارہاہے،حکومت کسی قسم کااین آراونہیں دے گی،کرپٹ عناصر کیخلاف کاروائی کی جائیگی، مولانا کی سمجھ نہیں آتی کبھی مذہبی کارڈ استعمال کرتے ہیں ، کبھی کچھ کہتے ہیں اور کبھی کچھ،مولانافضل الرحمان کامیڈیابلیک آئوٹ نہیں ہوناچاہیے، ان کے انٹرویو اور خبر چلانے پر کوئی پابندی نہیں ہوگی،انہوں نے کہا کہ نوازشریف کی صحت سے متعلق مجھ پر الزام لگایا جا رہا ہے ، نوازشریف جیل میں اپنی سزا کاٹ رہے ہیں ، جیل انتظامیہ ان کے معاملات دیکھ رہی ہے ، جیل حکام اور ڈاکٹرز کے کام میں میں کیسے قصور وار ہوا۔