ترک وزیر خزانہ نے کرنسی بحران پر استعفیٰ دیدیا

انقرہ(شِنہوا)ترکی کے سرکاری گزٹ میں جاری ہونیوالے صدارتی فرمان کے مطابق ترک لیرا کی قدر میں شدید گراوٹ کے باعث ترکی کے وزیر خزانہ لطفی ایلون نے جمعرات کے روز استعفیٰ دیدیا ہے۔

سرکاری گزٹ کے مطابق لطفی ایلون اپنی ذمہ داریوں سے سبکدوش ہوگئے ہیں۔

ترک صدر رجب طیب ایردوان نے نورالدین نباتی کو نیا وزیر خزانہ مقرر کر دیا ہے ۔ نورالدین نباتی نومبر 2020 سے وزیرخزانہ کے طور پر ذمہ داریاں سرانجام دینے والے لطفی ایلون کے نائب تھے۔

رجب طیب ایردوان کی جانب سے کم شرح سود کی پالیسی کی مخالفت کرنے پر کئی بار بالواسطہ طور پر لطفی ایلون کو تنقید کا نشانہ بنایا چکا ہے ۔ ترک صدر ترک لیرا کی قدر میں کمی اور بڑھتی ہوئی افراط زر کے باوجود کم شرح سود پر اصرار کر رہے تھے۔

ایردوان نے 17 نومبر کو کہا تھا کہ اس جدوجہد میں ایک ساتھ چلنے پر ہمارے دوستوں کو کوئی اعتراض نہیں ہے ۔ میں ایسے لوگوں کے ساتھ نہیں رہ سکتا جو بلند شرح سود کا دفاع کرتے ہیں۔