موسمیاتی تبدیلی اور غربت کے خاتمے میں چین نے نمایاں کردار ادا کیا ہے، الیس جاہبانہ

بیجنگ(آئی این پی) اقوام متحدہ کے اقتصادی اور سماجی کمیشن برائے ایشیا و بحرالکاہل کی ایگزیکٹو سیکریٹری الیس جاہبانہ نے حال ہی میں چائنا میڈیا گروپ کے رپورٹر کے ساتھ خصوصی انٹرویو میں کہا کہ چین نے گزشتہ 50 سالوں میں اقوام متحدہ میں بے حد مثبت حصہ ڈالا اور بہت زیادہ شعبوں میں اہم کردار ادا کیا ہے۔
الیس جاہبانہ نے کہا کہ چین ایشیا پیسیفک خطے میں نمایاں ترقی کرنے والے ممالک میں سے ایک ہے۔چین کی کامیابی کا ایک اہم عنصر مختلف ممالک کے ساتھ تعاون اور شراکت داری کو برقرار رکھنا ہے۔ اقوام متحدہ کا اقتصادی اور سماجی کمیشن برائے ایشیا اور بحرالکاہل ہمیشہ ممالک کے مابین اتحاد کو فروغ دینے کے لیے پرعزم ہے اور اس میں چین کا کردار اور شراکت مسلسل بڑھ رہی ہے۔ پائیدار ترقی ، فوڈ سکیورٹی ، موسمیاتی تبدیلی اور غربت کے خاتمے سمیت دیگر شعبوں میں چین نے نمایاں اور مثالی کردار ادا کیا ہے۔
الیس جاہبانہ کی رائے میں ’’بیلٹ اینڈ روڈ‘‘ انیشئیٹوکو عملی جامہ پہنانے کے عمل میں چین دیگر ممالک کے ساتھ پائیداری ، لچک اور شمولیت کے ساتھ علاقائی اقتصادی اور سماجی ترقی کو آگے بڑھانےکے لیے تعاون کررہا ہے۔ چین وبا سے لڑنے کے لیے دوسرے ممالک کے ساتھ تعاون کرنے اور عالمی معیشت کی بحالی کو فروغ دینے میں اپنا حصہ ڈال سکتا ہے۔
انہوں نے کہا کہ ہم چین کے ساتھ باہمی روابط ، تجارت ، سرمایہ کاری و ترقیاتی فنانسنگ ، توانائی ، تکنیکی جدت ، آب و ہوا کی تبدیلی اور ماحولیاتی چیلنجز سے نمٹنے سمیت متعدد شعبوں میں مزید وسیع تعاون کر سکتے ہیں۔