چینی صدر شی کی اہلیہ کے ہمراہ شمالی کوریا کے وفد سے ملاقات

بیجنگ(آئی این پی)چینی کمیونسٹ پارٹی کی مرکزی کمیٹی کے جنرل سیکرٹری اور چین کے صدر شی جن پھنگ اور ان کی اہلیہ پھنگ لی یوان نے گذشتہ روز بیجنگ میں شمالی کوریا کی ورکرز پارٹی کی مرکزی کمیٹی کے سیاسی بیورو کے رکن اور پارٹی کے بین الاقوامی امورکے شعبے کے سربراہ ری سوینگ کی قیادت میں آنے والے شمالی کوریا کے دوستانہ ثقافتی طائفے کے ارکان سے ملاقات کی۔ چائنہ ریڈیو انٹرنیشنل کے مطابق صدرشی جن پھنگ نے کہا کہ شمالی کوریا کے وفد کا موجودہ دورہ چین دونوں ممالک کے درمیان حاصل شدہ اہم اتفاق رائے پر عملدرآمد کا مظہر اور ثقافتی تبادلوں کی ایک اہم سرگرمی ہے۔انکامزید کہنا تھا کہ یہ چین اور شمالی کوریا کے درمیان سفارتی تعلقات کے قیام کے70ویں سال کی خوشیاں منانے کی ایک اہم سرگرمی بھی ہے۔چینی صدر نے کہا کہ انہیں یقین ہے کہ شمالی کوریا کے اس وفد کا یہ دورہ کامیاب رہے گا۔یہ دورہ چین اور شمالی کوریادونوں ممالک کے عوام کے ایک دوسرے کے لئے دوستانہ جذبے میں مزیداضافہ کرے گا۔صدر شی جن پھنگ نے مزید کہا کہ 2018کے بعد سے میں نے چیرمین کم جونگ ان کے ساتھ چار ملاقاتیں کی ہیں۔ان ملاقاتوں کے دوران نئے عہد میں چین اور شمالی کوریا کی دونوں سیاسی جماعتوں اور دونوں ممالک کے تعلقات کی ترقی کے حوالے سے اہم اتفاق رائے حاصل کیا گیا ہے۔رواں سال دونوں ممالک کے سفارتی تعلقات کے قیام کا70واں سال ہے۔چین شمالی کوریا کے ساتھ حاصل شدہ اہم اتفاق رائے پر عمل درآمد کرنا چاہتا ہے۔دونوں عوام کے مفادات میں مزید اضافہ کرنا چاہتا ہے اور علاقائی اور عالمی امن و استحکام،ترقی اور خوشحالی کیلئے مثبت خدمات سرانجام دینا چاہتا ہے۔